قومی

  • قومی
  • May 24, 2016

اسلام آباد:وزیرخزانہ کی صدارت میں اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس

کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی نے ایک ارب پچھترکروڑ روپے کے رمضان پیکیج کی منظوری دیدی ہے۔گزشتہ سال کی نسبت اس باررمضان المبارک میں عوام کو ریلیف دینے کیلئے پچیس کروڑ روپے زیادہ رکھے گئے ہیں۔رمضان پیکیج کے تحت یوٹیلیٹی سٹورز پردستیاب بائیس ضروری اشیاپرعوام کو سہولت دی جائیگی ۔
وزیرخزانہ اسحاق ڈارکی سربراہی میں اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں بتایا گیا کہ وزیراعظم کی ہدایت پر یوٹیلیٹی سٹورزکارپوریشن نے ستائیس اپریل سے مختلف اشیاء کی قیمت میں پچاس روپے تک کمی کی ہے جو ماہ مقدس کے دوران بھی جاری رہے گی ۔
یوٹیلیٹی سٹورزپرمجموعی طورپرایک ہزاراشیاء کی قیمتیں رمضان المبارک کے دوران دس فیصد تک کم کی جائینگی۔
کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی نے گوادربندرگاہ کی ترقی کیلئے ٹیکس میں رعایت کی منظوری بھی دی۔گوادربندرگاہ کے فری زون میں سرمایہ کاری کرنیوالوں کوتئیس سال تک ٹیکس میں رعایت ملے گی۔
اقتصادی رابطہ کمیٹی نے گڈوپاورسٹیشن کو اضافی گیس کی فراہمی کی بھی منظوری دی۔ پانی اوربجلی کی وزارت کےسیکرٹری نے کمیٹی کو بتایا کہ گزشتہ سال مئی میں بجلی کی پیداوارچودہ ہزارایک سومیگاواٹ تھی جو اس سال بڑھ کر سولہ ہزارتین سومیگاواٹ تک پہنچ چکی ہے۔وزیرخزانہ نے وزارت پانی وبجلی کی کوششوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ موثراقدامات کے نتیجے میں دوہزاراٹھارہ تک دس ہزارمیگاواٹ اضافی بجلی نظام میں شامل ہوجائے گی ۔