کرکٹ

  • کرکٹ
  • Aug 17, 2018

پی ایس ایل سپاٹ فکسنگ کیس

پی ایس ایل سپاٹ فکسنگ کیس میں ملوث سابق پاکستانی اوپنر ناصر جمشید پر 10 سال کی پابندی عائد کر دی گئی ہے۔
پی سی بی اینٹی کرپشن ٹریبونل نے ناصر جمشید کو پی ایس ایل سپاٹ فکسنگ کیس کا مرکزی کردار قرار دیتے ہوئے ان پر نہ صرف دس سال کی پابندی عائد کی ہے بلکہ انہیں مستقبل میں ٹیم منیجمنٹ اور پی سی بی میں کوئی بھی عہدہ نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔
ناصر جمشید پر 5 شقوں کی خلاف ورزی کے الزامات تھے جن میں بکیز سے رابطہ ، پی سی بی انتظامیہ سے عدم تعاون، ساتھی کھلاڑیوں کو میچ فکسنگ کیلئے اکسانے اور تمام معلومات پی سی بی سے چھپانے کے الزامات شامل تھے۔
فیصلے کے بعد پی سی بی کے وکیل تفضل رضوی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آج سپاٹ فکسنگ اسکینڈل پی ایس ایل2 کا فائنل راؤنڈ ختم ہوگیا ہے،بہت دکھ ہے، ایک اور کھلاڑی فکسنگ کی زد میں آگیا۔