ٹاپ سٹوری

  • ٹاپ سٹوری
  • Aug 20, 2018

وزیراعظم عمران خان کی صدارت میں وفاقی کابینہ کاپہلااجلاس

بچت اور سادگی اپنائی نہیں جائیگی بلکہ اس پر عمل درآمد شروع ہوگیا ہے ۔۔وفاقی کابینہ کے پہلے اجلاس میں بڑے فیصلے ۔۔۔۔
وفاقی کابینہ نے وزیراعظم ہاؤس کی اضافی گاڑیوں کی نیلامی کی منظوری دیتے ہوئے گورنر ہاوزز، کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز کی رہائش گاہوں کو منافع بخش مقامات بنانے کیلئے دو کمیٹیاں بنادی گئیں ۔ وزیراعظم عمران خان کی صدارت میں کابینہ کے پہلے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ آئندہ کسی وزیر کا سرکاری خرچ پر بیرون ملک علاج نہیں ہوگا، وزراء اور بیوروکریٹس کے بیرون ملک دورے ختم کردیئے گئے جبکہ وزیراعظم خود بھی غیر ضروری بیرونی دوروں سے گریز کرینگے۔ کابینہ نے نوازشریف اور مریم نواز کے نام ای سی ایل میں ڈالنے اور اسحاق ڈار،حسن اور حسین نواز کو فوری واپس لاکر عدالت میں پیش کرنے کی بھی منظوری دی۔کابینہ کے فیصلوں کی تفصیل بتارہے ہیں ریاض برکی۔
کپتان نے قوم سے خطاب میں سادگی اور بچت کے وعدوں پر ایک لمحہ ضائع کئے بغیر عملدرآمد شروع کردیا۔ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے پہلے ہی اجلاس میں وزیراعظم ہاؤس کی اضافی گاڑیوں کی نیلامی کی منظوری دے دی گئی۔
اجلاس میں فیصلہ کی گیا کہ آئندہ کسی وزیر کا سرکاری خرچ پر بیرون ملک علاج نہیں ہوگا۔ تاریخی اہمیت کی حامل سرکاری املاک اور کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز اور دیگر سرکاری املاک کا جائزہ لینے کیلئے دو کمیٹیاں بنانے کا فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ وزراء اور بیوروکریٹس بیرون ملک دورے نہیں کریں گے جبکہ وزیراعظم خود بھی غیر ضروری بیرونی دوروں سے گریز کرینگے۔ وزیراطلاعات فواد چوہدری نے اجلاس کے حوالے سے میڈیا کو بتایا کہ وزیراعظم عمران خان کے بچت اور سادگی کے فیصلوں پر عملدرآمد شروع ہو گیا ہے۔
فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف نے قوم سے احتساب کا وعدہ کا تھا اور یہ سب سے پہلے وزیراعظم اور انکی کابینہ سے شروع ہوگا۔ وزیراعظم عمران خان اور انکی کابینہ کے ارکان نے اپنے اثاثے قوم کے سامنے رکھنے کا فیصلہ کیاہے ۔ انکا کہنا تھا کہ قوم کی لوٹی ہوئی دولت واپس لائی جائے گی۔
وزیراطلاعات فواد چوہدری نے کہا کہ وفاقی کابینہ نے گستاخانہ خاکوں کی شدید مذمت کی ہے۔ ایک سوال پر وزیراطلاعات نے کہا کہ اپوزیشن کے حوالےسے پی ٹی وی کو مکمل آزادی دی گئی ہے