قومی

  • قومی
  • Sep 16, 2020

بھارت اپنے رویے سے ہر فورم پر اپنی ساکھ کھو رہا ہے،وزیر خارجہ

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ شنگھائی تعاون تنظیم میں یہ اصول طے ہے کہ اس فورم پر دو طرفہ معاملات کو نہیں اٹھایا جا سکتا۔لیکن بھارت نے اس اصول کی خلاف ورزی کی اور دو طرفہ معاملے پر اعتراض اٹھایا۔:وزیر خارجہ نے اپنے بیان میں کہا کہ اسی وجہ سے ایس سی او قومی سلامتی مشیروں کے اجلاس میں بھارت کو ندامت اٹھانا پڑی۔انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر عالمی سطح پر تسلیم شدہ متنازعہ علاقہ ہے۔روس نے اجلاس کے میزبان کی حیثیت سے بھارت کے نقطہ نظرکو تسلیم نہیں کیا۔بھارت اپنے رویے سے ہر فورم پر ساکھ کھو رہا ہے۔شاہ محمود قریشی نے کہاکہ دو طرفہ معاملات کیلئے سائیڈ لائن ملاقاتیں طے ہوتی ہیں۔ہم نے ایس سی او کے قواعد کی پاسداری کی لیکن بھارت کے سیکورٹی ایڈوائزر نے اجلاس سے واک آؤٹ کی دھمکی دی اور پھر واک آؤٹ کیا۔وزیر خارجہ نے کہاکہ لداخ کے حوالے سے چین نے بھارت کو بارہا گفتگو کے ذریعے معاملات سلجھانے کی پیشکش کی۔لیکن بھارت نے وہاں بھی جارحیت کا راستہ اختیار کیا اور اسے سبکی کا سامنا کرنا پڑا۔