بین الاقوامی

  • بین الاقوامی
  • Nov 22, 2020

ریاض:بیس بڑی معیشتوں کی تنظیم جی ٹونٹی کا اجلاس

بیس بڑی معیشتوں کی تنظیم جی ٹونٹی کا اجلاس سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں اختتام پذیر ہو گیا۔ دو روزہ اجلاس میں تنظیم کے رہنماوں نے دنیا بھر میں کورونا ویکسین کی منصفانہ تقسیم کو یقینی بنانےکے عزم کا اعادہ کیا ، اور قرضوں سے ڈوبے غریب ممالک کیلئے رعایتوں پر اتفاق کیا۔تنظیم کے ارکان نےکثیر جہتی تجارت اور موسمیاتی تبدیلیوں کے خلاف جنگ کی حمایت کرنے پر بھی اتفاق کیا ،تاہم ان تمام باتوں کا باقاعدہ اعلان مشترکہ اعلامیے میں کیا جائے گا۔
سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی زیر صدارت ورچوئل اجلاس میں چین ،روس، ترکی،امریکہ ،برازیل، ارجنٹائن ، انڈونیشیا،میکسیکو، جنوبی کوریا،فرانس ،جنوبی افریقہ اور یورپی کمیشن کےصدور ۔کینیڈا، برطانیہ ،جاپان، آسٹریلیا،اٹلی، اوربھارت کےوزرائے اعظم ،جرمنی کی چانسلر ،اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے شرکت کی۔متحدہ عرب امارات، سوئٹزر لینڈ،سپین، سنگاپور، اردن، روانڈا، اور ویتنام بطور مہمان شریک تھے۔جی ٹوئنٹی دنیا کی اہم اقتصادی طاقتوں کا مجموعہ ہےجومجموعی عالمی پیداوار کے 85 فیصد کامالک ہے۔امیر ممالک کی تنظیم میں بھارت واحد رکن ملک ہے جس کے عوام غربت کی لکیر سے بھی نیچے زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔