بین الاقوامی

  • Sep 15, 2021

غیر ملکی قوتیں افغانستان کے داخلی معاملات میں دخل اندازی نہ کریں: امیر خان متقی

افغانستان کے نئے وزیر خارجہ امیر خان متقی نے کہا ہے کہ غیر ملکی قوتیں افغانستان کے داخلی معاملات میں دخل اندازی نہ کریں۔کابل میں اپنی پہلی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عالمی برادری حکومت سازی کے لیے بے جا شرائط عائد نہ کرے۔ انہوں نے کہا کہ طالبان کے نام دہشت گردوں کی فہرست سے نکالے جائیں۔
امریکہ کو ’دل بڑا‘ کرکے افغانوں پر مزید دباؤ ڈالنے سے گریز کرنا چاہیے۔امیر متقی نے کہا کہ ’امارت اسلامی نے امریکیوں کی مدد کی اور ان کے انخلا کی راہ ہموار کی۔ ہم نے اپنا یہ وعدہ پورا کیا کہ انخلا اچھی طرح ہوجائے لیکن بدقسمتی سے اس تعاون کو سراہنے کی بجائے امریکہ ہمارے لوگوں پر پابندیاں عائد کر رہا ہے۔ ہم نے گذشتہ بیس سالوں میں دیکھا ہے کہ دباؤ کی پالیسی کے کوئی نتائج نہیں تھے اور نہ ہی مستقبل میں اس کے نتائج ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ افغانستان کے لیے ایک ارب ڈالر کی امداد کا وعدہ کیا گیا ہے۔ ہم ان تمام ممالک اور تنظیموں کا شکریہ ادا کرتے ہیں جنہوں نے اس امداد کا وعدہ کیا۔ اس کے ساتھ ہی ہم وعدہ کرتے ہیں کہ یہ امداد لوگوں میں شفاف انداز میں تقسیم کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ کسی فرد یا گروپ کو اپنی سر زمین کسی بھی دوسرے ملک کے خلاف استعمال کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔